مذہبی جماعت کا دھرنا، لاہور میں انٹرنیٹ سروس معطل

لاہور میں تحریک لبیک کا دھرنا جاری، مختلف علاقوں میں انٹریٹ سروس معطل کردی گئ۔

 

 

لاہور (   ) وزارت داخلہ نے پاکستان ٹیلی کمیونیکیشن اتھارٹی کو لاہور کے مختلف علاقوں میں انٹرنیٹ سروس مطل کرنے کا نوٹیفیکیشن جاری کیا گیا ہے، حکومت پنجاب کو لکھے گئے نوٹیفیکیشن میں کہا گیا ہے کہ لاہور میں حالیہ تحریک لبیک کی وجہ سے پیدا ہونیوالی کشیدگی سے انٹرنیٹ سروس کو معطل کیا جائے، انٹرنیٹ سروس کے تمام کنکشن کو معطل کیا جائے، جس میں وائی فائی، ڈی ایس ایل، فکسڈ لائن کنکشن شامل ہیں، لاہور کے جن علاقوں میں سروس معطل کی گئی ہے، ان میں سمن آباد، شیراکوٹ، نواں کوٹ، گلشن راوی، سبزہ زار اور اقبال ٹاؤن شامل ہیں۔

 

 

نوٹیفیکیشن میں پاکستان ٹیلی کمیونیکیشن اتھارٹی کو کہا گیا ہے کہ ضرورت پڑنے پر نوٹیفیکیشن کا دورانیہ بڑھایا بھی جاسکتا ہے، تاحکم ثانی تک سروس معطل رکھی جائے گی۔

 

 

 

لاہور ہائی کورٹ نے تحریک لبیک کے سربراہ کی رہائی کا 3 دفعہ فیصلہ سنایا ہے، حکومت پنجاب نے سعد رضوی کی رہائی کے عدالتی احکامات پر عملدرآمد نہیں کیا، تحریک لبیک کی جانب سے کیس سپریم کورٹ لے جایا گیا، سپریم کورٹ نے کیس کو واپس لاہور ہائی کورٹ بھیج دیا تھا، 12 ربیع الاؤل کو تحریک لبیک کی مرکزی قیادت نے اعلان کیا کہ سعد رضوی کی رہائی تک دھرنا دیا جائے گا۔

 

 

تحریک لبیک کے دھرنے کو محدود کرنے کیلئے حکومت پنجاب نے تحریک لبیک کے مرکز کے ملحقی علاقوں کو کنٹینر لگا کر بند کرنا شروع کردیا ہے، پنجاب کے مختلف شہروں میں تحریک لبیک کے کارکنوں کو گرفتاری کیلئے آپریشن شروع کردیا گیا ہے، پولیس کی بھاری نفری مسجد رحمتہ العالمین چوک یتیم خانہ پہنچ گئی ہے، حالات کو کشیدہ ہونے سے بچانے کیلئے انٹرنیٹ سروس بھی معطل کی جارہی ہے۔

Read Previous

مرغی کا گوشت 16 روپے سستا ہوگیا

Read Next

مذہبی جماعت کا دھرنا، سڑکیں بند، شہری پریشان

تبصرہ کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے